اعتراض (الف):”لیکن چوتھے دن سورج اور چاند کے لئے جو لفظ استعمال ہوا ہے وہ ”خلق“ہے نہ کہ ”ظاہر کیا“!“

اِن آیات میں استعمال لفظ ’خلق‘ (בּרא, bârâ’ ) نہیں ہے بلکہ ”ظاہر کیا“ (עשׂה,‛âśâh)ہے۔پرانے عہد نامے میں یہ لفظ 1,200مرتبہ آیا ہے اور اِس کے وسیع معنی ہیں،جن میں ”کیا“،”بنایا“،”دکھانا“،”ظاہر کرنا“،”ظاہر کیا،“وغیرہ شامل ہیں۔اِس حقیقت کی روشنی میں،ہمیں یہ نتیجہ اخذ کرنا چاہیے کہ سورج اورچاند پہلے دن خلق ہوئے(آیت 3) لیکن چوتھے دن ظاہر ہوئے۔

Trackback from your site.

کتاب کی تلاش